تازہ ترین
امریکی اسٹیٹ ڈیپارٹمنٹ کا عملے کو افغانستان چھوڑنے کاحکم
  28  اپریل‬‮  2021     |     بین الاقوامی دفاع
امریکہ کے اسٹیٹ ڈیپارٹمنٹ نے غیرضروری عملہ کو سکیورٹی خدشات کے باعث افغانستان کے کابل میں قائم امریکی سفارتخانہ چھوڑنے کا حکم دے دیاہے۔اسٹیٹ ڈیپارٹمنٹ نے ایک سفری ہدایت نامہ میں کہاہے کہ اس نے کابل میں امریکی سفارتخانہ کے سرکاری ملازمین کو روانہ ہونے کاحکم دیا ہے جن کے فرائض کسی دوسری جگہ سے انجام د ئے جا سکتے ہیں۔افغانستان میں امریکی چا رج ڈی افیئرز روز وِلسن نے ٹویٹ کیاکہ روانگی کی منظوری کابل میں بڑھتے ہوئے تشدد اور دھمکیوں کی رپورٹس پر دی گئی۔انہوں نے مزیدکہاکہ روانگی سے کابل میں امریکی سفارتخانے کے نسبتا کچھ ملازمین متاثر ہوں گے،جس پر فوری عملدرآمد کیاجائے گا۔یہ اقدام یکم مئی سے کچھ دن قبل اٹھایا گیا ہے جب صدرجوبائیڈن نے رواں ماہ کے اوائل میں اعلان کیا تھا کہ امریکہ اور نیٹو کے دستے افغانستان سے انخلا شروع کریں گے۔اگرچہ سابق ڈونلڈ ٹرمپ انتظامیہ اور افغان طالبان نے امریکی دستوں کے ملک سے انخلا کیلئے یکم مئی حتمی تاریخ مقرر کی تھی،طالبان نے حتمی تاریخ پر عمل کرنے میں ناکام ہونے پر بائیڈن انتظامیہ کو نتائج کی دھمکی دی تھی۔

 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں

رابطہ کریں
   
(92) 51 2873311-12
   
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔