تازہ ترین
یمن ، مآرب پر حوثیوں کے حملے جاری ، درجنوں افراد ہلاک
محاصرے ، تلاشی کار روائیاں جاری ، باڈی پورہ سے خاتون گرفتار
عبوری افغان کابینہ وہ جامع حکومت نہیں جس کا طالبان نے وعدہ کیا تھا امریکہ
طالبان کیخلاف جنگ ابھی ختم نہیں ہوئی، کمانڈر پنج شیر
حقانی خاندان کو بلیک لسٹ کرنا دوحہ معاہدے کی خلاف ورزی ہے،ذبیح اللہ مجاہد
دورہ قطر، ڈپٹی وزیراعظم، فوجی سر براہ سے ملاقاتیں، تعلقات پائیدار شراکت داری میں بدل رہے ہیں : جنرل باجوہ
  8  جولائی  2021
آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ دو روزہ سرکاری دورے پر قطر پہنچ گئے جہاں ان کی قطر کے ڈپٹی وزیراعظم اور مسلح افواج کے چیف آف سٹاف سے اہم ملاقاتیں ہوئیں۔ ان ملاقاتوں میں دو طرقہ تعلقات اور تعاون کے فروغ پر بات چیت کی گئی۔ پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کے مطابق آرمی چیف اور قطری قیادت کے درمیان ملاقاتوں میں باہمی دلچسپی کے امور، دفاعی تعاون، سکیورٹی شعبوں جبکہ خطے اور سیاسی صورتحال پر غور کیا گیا۔ اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا کہ پاکستان اور قطر کے درمیان تاریخی اور بھائی چارے پر مبنی تعلقات ہیں۔ پاک قطر تعلقات پائیدار شراکت داری میں بدل رہے ہیں۔ انہوں نے افغان امن عمل میں قطر کے کردار کو سراہا۔ ملاقاتوں میں قطری قیادت نے خطے میں امن کیلئے پاکستان کی کوششوں کی تعریف کرتے ہوئے پاک قطر تعلقات کو مزید مضبوط بنانے کے عزم کو دہرایا۔

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے ترک لینڈ فورسز کے کمانڈر جنرل امت دندار نے ملاقات کی. آئی ایس پی آر کے مطابق ملاقات میں باہمی دلچسپی، پیشہ ورانہ امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ڈی جی آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف سے ترک لینڈ فورسز کے کمانڈر جنرل امت دندار کی جی ایچ کیو میں ملاقات ہوئی۔ دوطرفہ سطح پر فوجی روابط کو مزید مستحکم، دونوں ممالک کے مابین تربیتی، انسداد دہشتگردی امور میں تعاون میں وسعت پر اتفاق ہوا۔آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ترکی کے ساتھ برادرانہ تعلقات کو کلیدی اہمیت دیتے ہیں، پاکستان اور ترکی تاریخی، ثقافتی اور مذہبی رشتوں میں بندھے ہیں۔اس موقع پر جنرل امت نے علاقائی امن و استحکام کے لیے پاکستان کے کردار کو سراہا، اُنہوں نے کہا پاکستان نے دہشتگردی کے خاتمے میں قابل قدر کردار ادا کیا۔
بلوچستان کے صوبائی دارالحکومت کوئٹہ میں محکمۂ انسدادِ دہشت گردی (سی ٹی ڈی) نے کارروائی کی ہے، انسدادِ دہشت گردی آپریشن کے دوران فائرنگ کے تبادلے کے نتیجے میں 5 دہشت گرد ہلاک ہو گئے۔ تفصیلات کے مطابق سی ٹی ڈی نے یہ آپریشن کوئٹہ میں ہزار گنجی کے علاقے میں کیا۔ دہشت گردوں کے قبضے سے اسلحہ اور بارود برآمد کر لیا گیا ہے۔ہلاک کیے گئے دہشت گرد ملک دشمن سرگرمیوں میں ملوث تھے۔سی ٹی ڈی کا کہنا ہے کہ دہشت گردوں کے خلاف آپریشن خفیہ اطلاع پر کیا گیا۔ ہزار گنجی میں فائرنگ کے تبادلے کے دوران 5 دہشت گرد ہلاک ہوئے، انسدادِ دہشت گردی کی کارروائیاں جاری رہیں گی۔ خیال رہے کہ اِس سے قبل کراچی میں کالعدم دہشتگرد تنظیم کا سہولت کاری پر مبنی نیٹ ورک بے نقاب ہوگیا۔کیماڑی پولیس نے اتحاد ٹاؤن سے کالعدم تحریک طالبان کے کارندے کو گرفتار کرلیا جو سوات میں مٹہ پولیس اسٹیشن پر حملے میں ملوث تھا۔گرفتار ملزم کے قبضے سے 500 گرام بارودی مواد برآمد ہوا۔ کراچی پولیس نے گزشتہ ماہ کارروائی کرتے ہوئے سوات میں پولیس اسٹیشن پرحملہ کرنے والا دہشت گرد گرفتار کرلیا۔ ایس ایس پی کیماڑی فدا حسین نے بتایا کہ کالعدم تنظیم کے دہشت گردکواتحادٹاؤن سے گرفتارکیا گیا۔دہشت گرد کے قبضے سے بارودی مواد اور دستی بم بھی برآمد ہوا۔ قبل ازیں کراچی کے علاقے لیاری میں کارروائی کرتے ہوئے سی ٹی ڈی نے کالعدم لشکرِ جھنگوی کے دہشت گرد کو گرفتار کر لیا جس کے قبضے سے دستی بم برآمد ہوا۔سی ٹی ڈی نے لیاری میں کارروائی کے دوران کالعدم تنظیم کا مبینہ دہشت گرد عبید الرحمان عرف عبید کیپری گرفتار کرلیا جس کے قبضے سے دستی بم برآمد کیا گیا جو دہشت گردی میں استعمال ہونے سے قبل ضبط کر لیا گیا۔
افغانستان سے طورخم کے راستے 242طلبہ و طالبات پاکستان پہنچ گئے۔ لنڈ ی کو تل، ہیڈکوارٹر ہسپتال میں 10طلبہ کو کورنٹائن کیا گیا۔ 232پشاور منتقل کیاگیا۔ طورخم، بسوں اور قرنطینہ سنٹروں میں سپرے کیا گیا۔ سرکاری ذرائع کے مطابق افغانستان سے 242طلبہء و طالبات طورخم کے راستے پاکستان پہنچ گئے۔ طورخم نادرا کے داخلی و خارجی راستے، بسوں کے اندر اور کورنٹائن سنٹروں کو ٹی ایم اے نے مکمل سپرے کیا۔ 242 میں سے 232 طلبہ و طالبات پشاور منتقل کئے گئے جبکہ صرف 10طلبہ کو لنڈی کوتل قرنطینہ سنٹر منتقل کئے گئے جہاں پر ان کے لئے انتظامات مکمل کر لئے گئے ہیں۔ ذرائع نے بتایا کہ توقع ہے کل 6سو طلبہ و طالبات آئے۔ یہ طلبہء و طالبات ہائر ایجوکیشن کمیشن کے سکالرشپ کے ذریعے پاکستان کے مختلف کالجوں اور یونیورسٹیوں میں امتحانات دینے کی غرض سے آئے ہیں۔


ہتھیار
        

تازہ ترین ویڈیو
سپیشل رپورٹس
بین الاقوامی دفاع
بین الاقوامی دفاع


تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔