تازہ ترین
پاک افغان دو طرفہ تعلقات کو اسٹرٹیجک پارٹنرشپ میں بدلنے کا وقت آگیا،سپیکروچیئرمین سینیٹ
  28  اکتوبر‬‮  2020     |     پاک دفاع
سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر اورچیئرمین سینیٹ محمد صادق سنجرانی نے کہا ہے کہ پاکستان اور افغانستان مشترکہ جغرافیائی، ثقافتی و مذہبی مماثلتوں کے بندھن میں جڑے ہوئے ہیں، افغانستان کے ساتھ معاونت کا ری کا فروغ ہماری خارجہ پالیسی میں اہمیت کا حامل ہے، دو طرفہ تعلقات کو اسٹرٹیجک پارٹنرشپ میں بدلنے کا وقت آگیا ہے،موجودہ تجارتی حجم کو بڑھانے کی ضرورت ہے،پاکستان افغانستان کے ساتھ تجارتی، اقتصادی و عوامی سطح پر راوبط کو مزید مستحکم کرنے میں مخلص ہے۔ پاکستان۔افغانستان تجارت و سرمایہ کاری فورم کی اختتامی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا چیئرمین سینیٹ محمد صادق سنجرانی کہ خطے کی ترقی اور اقتصادی خوشحالی کا انحصار رابطہ کاری، تجارتی تعاون او ربہتر سرمایہ کاری کے مواقعوں پر منحصر ہے۔ پاکستان اور افغانستان مشترکہ جغرافیائی، ثقافتی و مذہبی مماثلتوں کے بندھن میں جڑے ہوئے ہیں۔ افغانستان کے ساتھ معاونت کا ری کا فروغ ہماری خارجہ پالیسی میں اہمیت کا حامل ہے۔ اس موقع پر سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے کہا ہے کہ پاکستان اور افغانستان تجارت و سرمایہ کاری کے ذریعے ملک اور عوام کی معاشی ترقی یقینی بنائیں گے، پاکستان کے ذریعے ٹرانزٹ ٹریڈ کو ممکنہ حد تک موثر اور باسہولت بنانا پاکستان کا ویژن ہے، ٹھوس سفارشات پر عمل درآمد یقینی بنا کر دونوں ممالک بہتر مستقبل کے لیے مستفید ہوسکتے ہیں،دونوں ممالک کے مابین درآمدات اور برآمدات میں نمایاں بہتری آئے گی ۔ اس سیمینار کی بدولت تجارت اور سرمایہ کاری کی راہ میں حائل مشکلات کو حل کرنے کا موقع ملے گا۔
 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں

رابطہ کریں
   
(92) 51 2873311-12
   
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔