تازہ ترین
ناروے: پارلیمنٹ پر سائبر حملہ روس نے کیا ہے
  15  اکتوبر‬‮  2020     |     سائیبر سکیورٹی
ناروے نے کہا ہے کہ ماہِ اگست میں پارلیمنٹ پر کئے گئے سائبر حملے کے پیچھے روس کا ہاتھ تھا۔ ناروے کے اسمبلی اسپیکر نے کہا ہے کہ 24 اگست کے سائبر حملے میں ناروے اسمبلی سے متعلق بعض معلومات چوری کی گئی ہیں۔انہوں نے کہا ہے کہ صورتحال پر فوری قابو پا کر حملے کو روک دیا گیا اور اس کی پولیس کو اطلاع دی گئی ہے۔سائبر حملے کے الزام کا روس کی طرف سے بھی فوری جواب دیا گیا ہے۔اوسلو میں روس کے سفارت خانے کی طرف سے جاری کئے گئے بیان میں کہا گیا ہے کہ "ناروے نے حملےمیں روس کا ہاتھ ہونے سے متعلق کوئی ثبوت پیش نہیں کیا۔ ہم ناروے کی طرف سے بیان کے منتظر ہیں"۔روس نے کہا ہے کہ" اس نوعیت کے الزامات ناقابل قبول ہیں۔ یہ ایک سنجیدہ اور قصداً اٹھایا گیا تحریکی قدم ہے جو دوطرفہ تعلقات کو نقصان پہنچائے گا"۔

 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں

رابطہ کریں
   
(92) 51 2873311-12
   
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔