تازہ ترین
لیبی فوج نے قومی وفاق حکومت کے متعدد ڈرون اڈے تباہ کردئیے
  5  ‬‮نومبر‬‮  2019     |     آرمی
لیبیا کی قومی فوج نے بتایا کہ اس کی فضائیہ نے مصراتہ ایئر فورس کالج اور طرابلس میں معیتیقہ فوجی اڈے پر الوفاق ملیشیا سے وابستہ متعدد ٹھکانوں پر بمباری کی ہے جس کے نتیجے میں وہاں پر ذخیرہ کیے گئے متعدد ڈرون طیارے اور دیگر اسلحہ اور گولہ بارود تباہ ہوگیا۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق لیبی فوج کی طرف سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا کہ فضائیہ نے مصراتہ ایئرفورس کالج پر گولہ بارود اور ڈرونز کے گوداموں کو نشانہ بناتے ہوئے تین فضائی حملے کیے۔ اس کے علاوہ طرابلس میں قومی وفاق حکومت کے زیرانتظام معیتیقہ اڈے کے ملٹری سیکشن میں ملیشیا کے ایک آپریشن روم کو نشانہ بنایا۔ اس کے علاوہ اس اڈے پر موجود ڈرونز، ان کے انفراسٹرکچر، اور میزائلو سمیت دیگر اسلحہ کو 100 فی صد تباہ کردیا گیا۔ مصراتہ کا اسٹریٹجک ایئر بیس لیبیا کی قومی وفاق حکومت کے پاس ہے۔ قومی وفاق حکومت اس اڈے کو مختلف آپریشنل کارروائیوں میں استعمال کرنے کے ساتھ ترکی سے لائے گئے اسلحہ اور گولہ بارود کو ذخیرہ کرنے کے لیے بھی استعمال کرتی ہے۔ جنرل خلیفہ حفتر کی زیر کمان قومی فوج نے طرابلس میں مسلح ملیشیا کے خلاف فضائی حملے تیز کردیے ہیں۔ گذشتہ روز طرابلس میں عین زارہ، خلفہ الفرجان اور دیگر مقامات پر بمباری کی۔ اس دوران بری فوج نیبھی اپنی پیش قدمی جاری رکھی ہوئی ہے۔نئی کمک نے طرابلس کے مضافات میں لیبیا کی فوج کی مضبوط فوجی موجودگی کو مزید بڑھا دیا۔ قومی فوج نے نمایاں پیش قدمی کرتے ہوئے دارالحکومت کے جنوب میں خصوصی پوزیشنوں اپنا کنٹرول سنبھال لیا۔ آنے والے دنوں میں طرابلس پرقبضے کی لڑائی میں مزید شدت کا امکان بھی دیکھا جا رہا ہے۔

 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں

رابطہ کریں
   
(92) 51 2873311-12
   
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔