تازہ ترین
سلامتی کونسل کی قرادادوں پر عملدرآمد نہ ہونے کی قیمت کشمیریوں کی نسلیں اپنے خون سے ادا کر رہی ہیں. پاکستان
  13  ستمبر‬‮  2019     |     پاک دفاع
اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی نے کہا ہے کہ سلامتی کونسل کی قرادادوں پر عملدرآمد نہ ہونے کی قیمت کشمیریوں کی نسلیں اپنے خون سے ادا کر رہی ہیں‘سلامتی کونسل کو انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں بشمول جبری گرفتاریاں اور مظاہرین پر پیلٹ گنز کے استعمال کو بھی رکوانا ہوگا اقوام متحدہ مقبوضہ کشمیر میںکرفیو ختم کروانے میں کردار ادا کرے. انہوں نے کہا کہ بھارت کی جانب سے سلامتی قراردادوں کو نظرانداز کرنا ادارے کی ساکھ پر سوالیہ نشان ہے. ڈاکٹر ملیحہ لودھی نے جنرل اسمبلی میں سلامتی کونسل کی کارکردگی پر مباحثے سے خطاب میں کہا کہ اقوام متحدہ قراردادوں پر عدم عملدر آمد کی قیمت کشمیریوں نے اپنے خون سے ادا کی‘انہوں نے کہا کہ حالیہ بھارتی غیر قانونی اقدام سے کشمیر میں جبر میں اضافہ ہوا ہے. واضح رہے کہ چند روز قبل اقوام متحدہ میں پاکستانی مندوب ملیحہ لودھی نے اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوترس سے ملاقات کی تھی جس میں مقبوضہ کشمیر پر گفتگو کی گئی‘ ملاقات میں مقبوضہ کشمیر میں بدتر صورتحال سے نمٹنے کے لئے اقدامات کرنے کی ضرورت پر زور دیا گیا تھا. ملیحہ لودھی کا کہنا تھا کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارت کے اقدامات نے سنگین انسانی بحران کو جنم دیا ہے اور وہاں کی صورتحال مسلسل بگڑتی جارہی ہے، کرفیو کے باعث مقبوضہ وادی میں معمولات زندگی مفلوج ہیں، مقبوضہ کشمیر میں کرفیو اور لاک ڈاﺅن جاری ہے. ملیحہ لودھی نے سیکرٹری جنرل کو باورکروایا تھا کہ گزشتہ ماہ مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی جانب سے غیر قانونی اقدام سے پیدا ہونے والا سنگین سیاسی اور انسانیت سوز بحران بین الاقوامی امن و سلامتی کے لئے خطرہ ہے، بھارت کی جانب سے کشمیر میں جاری مظالم پر پاکستان خاموش نہیں رہے گا کیوں کہ بھارتی اقدامات عالمی اقدامات کی خلاف ورزی ہے. گزشتہ روز سلامتی کونسل میں افغانستان پر مباحثے سے خطاب کرتے ہوئے پاکستانی مندوب نے کہا تھا کہ مذاکراتی عمل کو لگے حالیہ دھچکے سے امن کی کوششوں میں کمی نہیں آنی چاہیئے. ملیحہ لودھی نے کہا تھا کہ پاکستان نے ہمیشہ کہا کہ افغانستان کا حل فوجی نہیں، مذاکرات ہیں‘ امریکا اور طالبان معاہدے کے قریب پہنچتے دکھائی دے رہے تھے افغانستان میں امن کوششوں میں پاکستان اپنا کردار ادا کرتا رہے گا. اننہوںنے افغان امن عمل کی جلد بحالی پر زوردیا انہوں نے امید ظاہر کی کہ بالاآخر حتمی معاہدے پر اتفاق ہوجائے گا امن مذاکرات کی معطلی وقتی ہے،جلد بحال ہونگے، پاکستان نے ہمیشہ کشیدگی کی مذمت کی اورتمام فریقوں پر ضبط و تحمل سے کام لینے پر زوردیا.

 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں

رابطہ کریں
   
(92) 51 2873311-12
   
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔