تازہ ترین
امریکا کے حزب اللہ نیٹ ورک کے خلاف سائبر حملوں کا انکشاف
  29  جون‬‮  2019     |     سائیبر سکیورٹی
امریکا نے ایران نواز لبنانی ملیشیا حزب اللہ کو ایک بڑے سائبر حملے کا نشانہ بنایا ہے۔ امریکی ذرائع نے امریکی نشریاتی ادارے کو بتایاکہ سائبر حملے کا مقصد حزب اللہ ملیشیا کے نیٹ ورک اور اس کے درمیان رابطوں کو ہیک کر کے غیر فعال بنانا تھا۔ حکام نے اس حوالے سے تفصیلات نہیں بتائیں کہ ایران کے ایجنٹ کے طور پر کام کرنے والی ملیشیا کے نیٹ ورک کو سائبر حملے سے کتنا نقصان پہنچا۔ امریکی وزارت دفاع نے اس خبر پر تبصرہ کرنے سے انکار کر دیا۔ مشرق وسطیٰ میں عسکری کارروائیوں کی نگراں امریکی قیادت کے ترجمان کیپٹن ولیم اوربین بے بتایا کہ امریکی مرکزی کمان کسی بھی ممکنہ سائبر حملے پر تبصرہ کرنے کو مسترد کرتی ہے۔امریکی فوج ضرورت پڑنے پر تباہ کن حملوں کے لیے اختیاری طور پر ممکنہ برقی آلات کی فہرست محفوظ رکھتی ہے۔ امریکی صدر بھی سائبر حملوں کے احکامات دینے کا اختیار رکھتے ہیں۔امریکی ذمے داران نے معلومات کی حساسیت کی بنا پر اپنے نام ظاہر نہ کرتے ہوئے بتایا ایران کے مفاد میں کام کرنے والی ملیشیا حزب اللہ ، اپنے پاس موجود ایرانی میزائلوں کے سبب تشویش کا خاص ذریعہ ہے۔

 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں

رابطہ کریں
   
(92) 51 2873311-12
   
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔