تازہ ترین
امریکہ نے لیبیا میں ایک ہفتے میں دوسری مرتبہ حملہ کیا
  2  اکتوبر‬‮  2017     |     شہ سرخیاں
امریکی فوج نے منگل کے روز ISISکے خلاف دو پرسئین حملے کئے اور کئی فائٹرز ہلاک کر دئے۔ امریکی افریقی کمانڈ کی ایک پریس ریلیز میں بتایا گیا۔
یہ حملے سرت سے صرف 100 میل باہر کئے گئے۔ یہ حملوں کی دوسری سیریز ہے جو امریکی افواج نے ایک ہفتے کے اندر کی اور اس دہشت گرد گروپ کے خلاف بڑے حملے کی پہلی کاروائی ہے جب سے امریکی B-2بمباروں نے جنوری میں سرت کے باہر ISISکے کیمپ پر حملہ کیا۔ جمعے کے روز ایک بغیر پائلٹ کے امریکی جہاز نےISISفائٹرز کے خلاف چھ فضائی حملے کئے جو سرت کے باہر صحرا میں 150میل باہر کیمپ لگائے ہوئے تھے۔
ان حملوں میں 17فائٹرز اور بہت سی جنگی گاڑیاں تباہ ہو گئیں۔
لیبیا معمر قدافی کے بعد2011 سے اندرونی کشمکش کا شکار ہے۔ اقوامِ متحدہ کی حمایت حکومت جس کی قیادت وزیرِاعظم فائز السراج کر رہے ہیں اور وہ فورسزجو جنرل خلیفہ ہفتار کی وفا دار ہیں انہوں نے اس جنگ زدہ ملک میں حالیہ عدم استحکام میں کردار ادا کیا ہے۔ اور اس افراتفری کا فائدہ ISISنے اٹھایا ہے اور کچھ عرصے کے لئے انہوں نے سرت کے بڑے شہر پر قبضہ بھی جما لیا۔
امریکی فضائیہ کی حمایت کے ساتھ اقوامِ متحد ہ کی حمایت یافتہ فوج نے اس لیبیائی شہر سے ISISفائٹروں کو مار بھگایا جو آپریشن اوڈیسی لائٹننگ کہلاتا ہے۔
تاہم ISISکو کھو دینے کے بعد ISISکے پاس اب بھی مقامی سیکیورٹی فوسز پر، اہم انفراسٹرکچر اور شہری اہداف پر حملہ کرنے کی صلاحیت ہے ۔‘‘ فالو و نے بتایا۔
ISISکے لیبیا آپریشنوں کو حال ہی میں گروپ کی ستمبر میں جاری کردہ ویڈیو میں شامل کیا گیاجس میں یہ دکھایا گیا کہ اس کے فائٹرز صحرا میں کس طرح رہتے اور کام کرتے ہیں۔


رابطہ کریں
   
(92) 51 2873311-12
   
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ دفاع ٹائمز محفوظ ہیں۔